قدس شریف پر ٹرامپ کے فیصلے کے خلاف 80،000 سے زائد اندونیزی مسلمانوں کا مظاہرہ

اہل بیت نیوز ایجنسی کے مطابق، انڈونیشی لوگوں نے اتوار کو جاکارٹا میں امریکی صدر ڈونالڈ ٹرامپ کے اشتعال انگیز فیصلہ کے خلاف بڑے پیمانے پر مظاہرے شروع کر کے قدس شریف کو صیہونی حکومت کے دارالحکومت کے طور پر تسلیم کرنے پر احتجاج کیا.
پولیس کے مطابق، 80،000 سے زائد لوگوں نے جاکارٹا کے اصلی مسجد سے موناس فیلڈ تک اس شہر میں مارچ کیا اور امریکی اور اسرائیلی مخالف نعرے لگائے . اسی طرح اس مارچ میں امریکہ اور صہیونی حکومت کے پرچم کو بھی جلا دیا گیا.
مظاہرین پر ایک تقریر میں انڈونیشیا کے علماء کونسل کے سیکرٹری جنرل انوار عباس نے کہا کہ ” ہم تمام ممالک سے اسرائیل کے دارالحکومت پر ایک طرفہ اور غیر قانونی ڈونالڈ ٹرامپ کے فیصلے کو مسترد کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں.”
بہت سے مظاہرے کرنے والے شرکاء سفید کپڑا پہنتے ہوے فلسطینی جھنڈوں کو اور “امن، محبت اور آزاد فلسطین” کے نشانوں کو ہاتھ میں لے رکهے تهے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.